تنخواہ دار طبقے کو بڑی بڑی تنخواہیں دیں گے! لیکن۔۔۔ وزیراعظم عمران خان نے سرکاری ملازمین سے خطاب میں اہم اعلان کردیا

اسلام آباد وزیراعظم عمران خان نے اسلام آباد میں سرکاری ملازمین سےخطاب کیا۔سرکاری ملازمین سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ مجھے صرف کام چاہئیے۔کبھی پاکستان کو اتنے چیلنجز نہیں تھےجتنے آج ہیں،قرضوں پر ہر روز 6 ارب روپے سود ادا کر رہے ہیں۔۔پاکستان پر تیس ہزار ارب کا قرضہ ہےاگر خود کو تبدیل نہیں کریں گے تو ترقی نہیں کریں گےسیاستدانوں،عوام اور بیوروکریسی نے خود کو بدلنا ہے۔
کوئی چیز دنیا میں نا ممکن نہیں ہے۔جب سے ملک آزاد ہوا ہے حکمران طبقے کا مائنڈ سیٹ ہی نہیں بدلا۔گوروں نے ہندوستان کے پیسوں سے شاہانہ طرز زندگی اپنایا تھا۔ہمارے حکمران طبقے نے غریب کے پیسے پر عیاشی کی گورے کی روایت کواپنایا،آزادی کے بعد حکومت اور عوام کو ایک ہونا چاہیے تھا،لیکن نہیں ہوئے۔

ہمیں انگریز کے دور کی سوچ کو تبدیل کرنا ہے،یہاں جس طرح خرچہ ایک حکمران طبقہ کر رہا کہیں نہیں ہوتا،جو خود کو تبدیل نہیں کرتا اللہ اس کی حالت تبدیل نہیں کرتا ہم نے آج تک پاکستان میں انگریزوں کے نظام کو ہی تبدیل نہیں کیا۔

سارا مسئلہ کرپشن کا ہے،اداروں میں بڑی سطح کی کرپشن ہے۔۔اورنج اور میٹرو ٹرین منصوبوں پر قرضے لیکر اس پر سود بھی دے رہے ہیں۔ناممکن کو ممکن بنانے کیلئے انسان کو خود کو بدلنا پڑتا ہے۔،قرضوں پر ہر روز 6 ارب روپے سود ادا کر رہے ہیں۔۔عمران خان نے کہا کہ سرکاری افسران جب تک پالیسی پرعملدرآمد نہیں کرائیں گے،ہم کامیاب نہیں ہوسکتے،،پاکستان کی 20 ارب ڈالر اور سنگاپور کی 330 ارب ڈالر کی ایکسپورٹ ہےبیوروکریسی کی شکایات آئیں ہیں،اس پر چیئرمین نیب سے بات کی۔
عمران خان کا کہنا تھا کہ قوموں کی زندگی میں اتار چڑھاؤ آتے رہتے ہیں لیکن 2سال میں حالات بدل جائیں گے۔ آپ کو یقین دلاتا ہوں کسی قسم کی سیاسی مداخلت نہیں ہوگی۔ہم بیوروکریسی کو تحفظ فراہم کریں گے اور سیاسی مداخلت سے بچائیں گے۔۔بیورو کریسی جرات مندانہ فیصلے کرے ساتھ دوں گا۔۔پاکستان کی بیورو کریسی کو کھویا ہوا وقار دوبارہ دلائیں گے۔قوم با صلاحیت ہے لیکن صرف نظام حکومت بدلنے کی ضرورت ہے۔تھوڑا سا مشکل وقت برداشت کریں،مشکل وقت زیادہ دیر تک نہیں ہوتا،2 سال میں گورننس ٹھیک ہو گئی تو ملک میں بہت سرمایہ کاری ہوگی۔2 سال بعد تنخواہ دار طبقے کو بڑی بڑی تنخواہیں دیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں