خیبر پختونخوا پولیس نے ایک بار پھر شاندار کارکردگی کی مثال قائم کر دی

پشاورخود کو وکیل ظاہر کر کے بزرگ ٹریفک وارڈن کو تشدد کا نشانہ بنانے والا اسسٹنٹ پروفیسر گرفتار ہوگیا۔تفصیلات کے مطابق آج یہ افسوسناک واقعہ پیش آیا تھا۔واقعے کے مطابق پشاورشیرشاہ سوری روڈ پرشہری نے وارڈن پرحملہ کیا اور لاتے مار کر زمین پرگرا دیا۔ٹریفک اہلکار پرپر حملہ کرنیوالے نے خود کووکیل ظاہرکیا ،انہوں نے پولیس کوگالیاں بھی دیں،اور گاڑی چھڑانے کی بھی کوشش کی۔
ٹریفک وارڈن کے مطابق کار میں سوار شہری کو رش کی وجہ سے دو منٹ رکنے کو کہاجس پروہ غصے میں آکر دھکے دیئے اورگالیاں دیں کہ میں وکیل ہوں۔۔ آئی جی پی خیبر پختونخوا صلاح الدین نے وارڈن پر تشدد کی ویڈیو کا نوٹس لے لیا۔
سی سی پی او قاضی جمیل کو قانونی کاروائی کا حکم دے دیا۔تاہم تازہ ترین خبر یہ ہے کہ خیبرپختونخواہ پولیس نے ایک بار بھر اپنی کارکردگی سے شاندار مثال قائم کر دی ہے۔

کچھ دیر پہلے تک کی خبر کے مطابق اس شخص کا سراغ نہیں لگایا جا سکا تھا لیکن اب اس حوالے سے خیبرپختونخواہ پولیس نے کاروائی کرتے ہوئے اس شخص کو گرفتار کر لیا ہےا ور اب یہ شخص سلاخوں کے پیچھے ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں