چیف سلیکٹر انضما م الحق قومی ٹیم کی کو چنگ کو چھوڑ کر کس معمولی کرکٹ ٹیم کی کوچنگ کرنے چلے گئے؟ ناقابل یقین خبر آ گئی، پی سی بی بھی حیران

لاہور(ویب ڈیسک ) قومی کرکٹ ٹیم کے چیف سلیکٹر انضمام الحق کی ”دیگر مصروفیات“ میں تیزی سے اضافہ ہونے لگا۔تفصیلات کے مطابق انضمام الحق کی بطور چیف سلیکٹر ذمہ داری بہت بڑی ہونے کے باوجود ان کی دیگر مصروفیات میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے،گزشتہ سال پی سی بی نے ان کی جانب سے ٹی10لیگ کی ٹیم خریدنے کا نوٹس لیا تھا جس پر انھوں

نے اسے فروخت کرنے کا اعلان کیا تھا۔بعد ازاں وہ پی ایس ایل فرنچائز لاہور قلندرز کے ساتھ وابستہ ہوئے اور گزشتہ دنوں کشمیر اور دیگر علاقوں میں ٹیلنٹ تلاش کرنے کے لیے گئے۔ اس دوران بورڈ نے ”مفادات کے ٹکراؤ“کا الزام لگاکرانھیں پاکستان سپر لیگ(( پی ایس ایل)) کے لیے پلیئرزکیٹیگری تشکیل دینے والی کمیٹی سے باہر کر دیا۔ایشیاءکپ میں قومی ٹیم کی ناقص کارکردگی کے بعد اطلاعات سامنے آئیں کہ انضمام الحق ایونٹ کی پلیئنگ الیون کے انتخاب سے خوش نہیں اور معاملات سدھارنے کے لیے متحدہ عرب امارات جا رہے ہیں،،پی سی بی کے خرچ پر جانے والے سابق کپتان نے قومی کرکٹرز کے ساتھ تھوڑا وقت بھی گزارا لیکن گرین شرٹس کی کارکردگی میں بہتری نظر نہیں آئی اور ٹیم بنگلہ دیش سے شکست کھا کر ایونٹ سے ہی باہر ہوگئی۔اس ناکامی کے بعد ون ڈے سپیشلسٹ کرکٹرز وطن واپس آگئے اور ٹیسٹ پلیئرز نے سکواڈ کو دبئی میں جوائن کرلیا مگرانضمام الحق نے ان کے ساتھ وقت گزارنے کی بجائے دوسری مصروفیت تلاش کرتے ہوئے ابوظہبی میں ٹی ٹونٹی لیگ کے لیے لاہور قلندرز کے ساتھ وقت گزارنا شروع کردیا۔واضح رہے کہ ماضی میں بھی

ڈومیسٹک میچز دیکھنے کو ترجیح نہ دینے والے چیف سلیکٹر نے اس بار بھی قائد اعظم ٹرافی کو نظر انداز کرتے ہوئے یواے ای میں ڈیرے ڈالنے کا فیصلہ کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں