بیگم کلثوم نواز کی مر نے کے بعد آخر ی خواہش کیاتھی جو پوری ہو نا مشکل لگ رہی ہے نواز شریف نے اہلیہ کی آخری خواہش بتا کر ہر کسی کو رولا دیاب

لاہور(نیوز ڈیسک ) سابق وزیر اعظم نواز شریف نے بیگم کلثوم نواز کی آخری رسومات کے موقع پر حسن نواز اور حسین نواز کے لیے حفاظتی ضمانت کا مطالبہ کردیا۔۔تفصیلات کے مطابق بیگم کلثوم نواز آج سہ پہر لندن میں انتقال کر گئیں۔سابق خاتون اول گزشتہ ایک سال سے کینسر کے مرض میں مبتلا تھیں۔اس موقع پر انکی میت کو لندن کی ریجنٹ پارک مسجد

میں منتقل کردیا گیا ہے جہاں سے انکے جسد خاکی کو جمعرات کے روز پی آئی اے کی پرواز سے لاہور لایا جائے گا۔دوسری جانب یہ بھی خبر آرہی تھی کہ انکے صاحبزادے انکی میت کے ساتھ پاکستان واپس نہیں آئیں گے۔بیگم کلثوم نواز کے انتقال کے بعد ان کے صاحبزادوں حسن اور حسین نواز سے متعلق سوال اٹھایا جا رہا تھا کہ آیا وہ پاکستان آئیں گے یا نہیں۔اس حوالے سے اب نجی ٹی وی چینل نے بتایا ہے کہ اپنی والدہ کی تدفین کیلئے حسن اور حسین نواز پاکستان واپس نہیں آئیں گے۔پاناما کیسز میں ملوث ہونے کے باعث حسن اور حسین نواز وطن واپس نہیں آ پائیں گے۔ جبکہ دوسری جانب بیگم کلثوام نواز کی آخری رسومات میں شرکت کیلئے نواز شریف اور مریم نواز کو پے رول پر رہائی دینے کا اعلان بھی کردیا گیا ہے۔ تاہم نواز شریف نے بیگم کلثوم نواز کی آخری رسومات کے حوالے سے حکومت سے اہم مطالبہ کردیا ہے۔سابق وزیر اعظم کا کہنا ہے کہ میری بیوی کی آخری خواہش تھی کہ انکے بیٹے ہی انکو قبر میں اتاریں اس لئیے میں یہ مطالبہ کرتا ہوں کہ حسن نواز اور حسین نواز کی وطن واپسی کو ممکن بنانے کے لیے انکو حفاظتی ضمانت دی جائے

اور یہ بھی یقین دہانی کروائی جائے کہ انکا نام ای سی ایل میں نہیں ڈالا جائے۔تاہم سابق وزیر اعظم کے اس مطالبے پر حکومت کی جانب سے کسی بھی قسم کے ردعمل کا اظہار نہیں کیا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں